تازہ ترین
outline

کالم Archives - Page 3 of 249 - آؤٹ لائن

میں مولو مُصلّی ہوں!-سہیل وڑائچ

اخوت والے ڈاکٹر امجد ثاقب سے میرا درد کا رشتہ ہے، وہ مولو مصلیوں سے محبت کرتے ہیں اور میں خود مولو مصلّی ہوں۔ گو میری اور مولو کی ذات برادری الگ ہے لیکن جب بھی میری روح کا استحصال ہوا، جب بھی مجھے نفرت اور حقارت سے دیکھا گیا، جب بھی تکبر و غرور… مزید پڑھیں

لفافہ صحافی کو مشورہ درکار ہے-بلال غوری

نام سے کیا فرق پڑتا ہے، کوئی بھی نام رکھ لیں، پٹواری کہہ لیں یا پھر لفافہ صحافی۔ سوشل میڈیا پر بہادری سے دشمن کا مقابلہ کر رہے جوان مجھے اسی نام سے پُکارتے ہیں۔ میں شروع سے لفافہ صحافی ہرگز نہ تھا۔ بس چند ہی برس میں دیکھتے دیکھتے تبدیلی کی لہر اُٹھی تو… مزید پڑھیں

ہار جیت کا جنون-امرجلیل

پچھلے ہفتہ ورلڈ کپ ٹورنامنٹ میں ہماری کرکٹ ٹیم نے دو دبنگ ٹیموں کو اچھے خاصے مارجن سے ہرادیا۔ ایک ٹیم تھی ، سائوتھ افریقہ اور دوسری ٹیم تھی نیوزی لینڈ، مگر ہماری قوم خوش نہیں ہوئی۔ بھنگڑے نہیں ڈالے گئے، گلی کوچوں اور چوراہوں پر ڈھول نہیں پیٹے گئے، مٹھائی نہیں بانٹی گئی۔ ایسے… مزید پڑھیں

عمران حکومت اور آرتھر کوئسلر کی فراموش شدہ کتاب-وجاہت مسعود

الحمدللہ! کل یکم جولائی تھی، نئے مالی سال کا پہلا دن۔ قومی اسمبلی نے وسیع تر قومی مفاد پر مکمل عبور رکھنے والی دانشمند قیادت کی نفیس، ماہرانہ اور فیصلہ کن رہنمائی میں جو بجٹ منظور کیا ہے، وہ کل سے نافذ العمل ہو گیا۔ اہل پاکستان خوشی سے پھولے نہیں سما رہے، خارجی اور… مزید پڑھیں

کرکٹ ٹیم سے کابینہ تک!-خالد مسعود خان

ایمانداری کی بات ہے کہ مجھے کرکٹ سے رتی برابر دلچسپی نہیں۔ اس کی وجہ یہ نہیں کہ پاکستان 1992 ء کا ورلڈ کپ جیت گیا تھا ‘بلکہ اس کی وجوہات بالکل مختلف ہیں۔ ؎ تمہارے وصل سے یہ راز تو کھلا مجھ پر کہ مجھ کو ہجر جو لاحق ہے وہ تمہارا نہیں اسی… مزید پڑھیں

اپنے ہی کانوں کو چیرتی للکار-میاں طاہر

بہادرشاہ ظفر بحیثیت بادشاہ بہت ہی ’’مظلوم بادشاہ‘‘ تھا۔ قرض کی مے پینے والے بادشاہ کی کیا حیثیت ہوتی ہوگی۔ جب اس کے خون میں شامل حاکمانہ اور شاہانہ آواز اُبھرتی ہوگی اور وہ اپنی بازگشت پر پھر منہ بسور کر رہ جاتا ہوگا۔ ایسے ہی بادشاہ آج کل پاکستان میں برسراقتدار ہیں، ہاتھ پاؤں… مزید پڑھیں

پاک بھارت تعلقات کی گاڑی-بلال غوری

پاک بھارت تعلقات میں نشیب و فراز کی کہانی انتہائی دلچسپ تو ہے مگر آج تک یہ معلوم نہیں ہو سکا کہ اس کہانی کو ٹریجڈی کہا جائے یا پھر کامیڈی۔ گاہے فریقین قہقہے لگا کر اپنی نادانیوں پر ہنستے ہیں تو اس کہانی پر مزاح کا گُمان ہوتا ہے مگر جب دوطرفہ دشمنی کی… مزید پڑھیں

اہلِ مصلحت کے نام-سہیل وڑائچ

مقتدر ترین حلقوں میں یہ مانا جاتا ہے کہ پانامہ اسکینڈل کسی ملکی یا غیر ملکی طاقت کا کام نہیں تھا بلکہ یہ ایک طرح سے قدرتی آفت تھی، جس نے شریفوں کو اپنی گرفت میں لے لیا اور اُنہیں جیلوں میں بند کروا کے چھوڑا۔ بالکل اسی طرح نیب کے حوالے سے بھی عذاب… مزید پڑھیں

مفتی صاحب اور سائنس-سلیم صافی

مفتی صاحب رات کو سائنس کی برکت سے بننے والے میڈ ان جاپان گھڑیال میں الارم لگا کر آرام سے سو جاتے ہیں۔ انہیں مکمل یقین ہوتا ہے کہ صبح مقررہ وقت پر الارم بجے گا کیونکہ انہیں سائنس پر یقین ہے۔ آنکھ کھلتے ہی وہ سوئٹزر لینڈ کی گھڑی یا پھر امریکہ کے ایجاد… مزید پڑھیں

رمضان اور شیطان-خورشید ندیم

معاشرے میں خیر کم نہیں ہے۔ یہ خیر مگر کسی مربوط سماجی تبدیلی کو جنم نہیں دے رہا۔ جیسے اقوالِ زریں کا ایک مجموعہ، جس سے کسی مرتب فکر کا استخراج مشکل ہو جائے۔ رمضان کے دنوں میں یہ احساس بڑھ جاتا ہے۔ ایسے ایسے مناظر دیکھنے کو ملتے ہیں کہ وفورِ جذبات سے دل… مزید پڑھیں