outline

خواتین کے فٹبال میچ دیکھنے کے حوالے سے کیا ایران سعودی عرب کی تقلید کریگا؟

تہران(ویب ڈیسک) سعودی عرب کی طرح ایران مٰن بھی خواتین کو کئی ایک پابندیوں کے تحت زندگی گزارنا پڑتی ہے، سعودی خواتین اب ناصرف سینما جا سکتی ہیں بلکہ ڈرائیونگ کر سکتی ہیں اور اسٹیڈیم میں میچ بھی دیکھ سکتی ہیں۔

اب ایران نے بھی خواتین کے لیے بھی فٹبال سٹیڈیم کے دروازے کھولنے کا فیصلہ کیا ہے جس پر جلد عمل درآمد کیا جائے گا۔

فٹبال کی عالمی تنظیم فیفا کے صدرجیانی انفانٹینو کا کہنا ہے کہ ایران نے خواتین پر فٹ بال سٹیڈیم جانے کی پابندی ختم کرنے کی یقین دہانی کرائی ہے اور وعدہ کیا ہے کہ وہ بہت جلد خواتین کو فٹبال اسٹیڈیم تک رسائی دیں گے۔

Image result for irani women football

تہران میں ایرانی صدر حسن روحانی اور دیگر حکام سے ملاقات کے بعد فیفا کے صدر نے بتایا کہ صدر حسن روحانی نے کہا کہ ملک میں خواتین کے لیے فٹبال سٹیڈیم کے دروازے اب زیادہ دیر تک بند نہیں رہیں گے تاہم ایرانی صدر نےاس متعلق کوئی ٹائم فریم نہیں دیا۔

واضح رہے کہ چند دن قبل ایران میں مردوں کا فٹبال میچ دیکھنے کے لیے سٹیڈیم میں داخل ہونے کی کوشش میں 35 خواتین کو حراست میں لے لیا گیا تھا جس پر انسانی حقوق کے اداروں کی جانب سے ایران کو تنقید کا نشانہ بنایا گیا تھا۔

ایران میں اسلامی انقلاب کے چند برس بعد سے خواتین کے سٹیڈیم میں بیٹھ کر مردوں کے میچ دیکھنے پر پابندی عائد ہے۔ علاوہ ازیں مردوں کے کھیلوں کی تقریبات میں بھی خواتین کا داخلہ ممنوع ہے۔

واضح رہے کہ چند روز قبل ہی سعودی عرب نے خواتین پر مردوں کے فٹبال میچ دیکھنے پر پابندی ختم کرتے ہوئے خواتین کے لیے سٹیڈیم کے دروازے کھول دیے تھے جس کے بعد خواتین کی بڑی تعداد فٹبال میچ دیکھنے کے لیے اسٹیڈیم میں موجود تھی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں

آپکا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا

*