outline

کیا تم سانٹا کلوز پر ایمان رکھتے ہو؟ڈونلڈ ٹرمپ کے احمقانہ سوال پر سوشل میڈیا برہم

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ جو اپنے جداگانہ بیانات اور عجیب و غریب ٹویٹس کی وجہ سے ہمیشہ زیر بحث رہتے ہیں انہوں نے ایک ایسا سوال پوچھ کر کرسمس کا مزا خراب کر دیا ہے جسے سوشل میڈیا پر احمقانہ سوال کہا جا رہا ہے

لیکن نہ جانے کن وجوہات کی بنا پر امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کرسمس سے پچھلی شام ایک بچے سے فون پر بات کرتے ہوئے یہ سوال پوچھ لیا کہ کیا تم سانٹا کلوز پر ایمان رکھتے ہو

صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور ان کی اہلیہ ملانیا دو دیو قامت کرسمس کے سجے درختوں کے پاس بیٹھے امریکی بچوں کی فون کالز کا جواب دے رہے تھے۔

تمام بچوں نے اس امید پر فون کیا تھا کہ وہ نوراڈ کی نظر میں آ جائیں گے۔ نوراڈ حکومت کی ایک ایجنسی ہے جو کرسمس کے موقعے پر دنیا بھر میں سانتا کی نقل و حرکت پر نظر رکھتا ہے (جزوی طور پر حکومت کی بندش کے باوجود یہ ایجنسی اب بھی اپنا کام کر رہی ہے)۔

بعض کال کرنے والوں کی کالز کا جواب صدر ٹرمپ اور ان کی اہلیہ نے دیا اور جواب میں صدر نے جو کچھ کہا وہ ہم تک پہنچانے کے لیے رپورٹر کیون ڈیاز کا شکرگزار ہونا چاہیے۔

ٹرمپ نے (گرجدار آواز میں) کول مین نامی ایک بچے سے کہا: ‘ہیلو، کیا کول مین بول رہے ہیں۔ میری کرسمس۔ آپ کتنے سال کے ہیں؟۔۔۔ آپ سکول میں اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کر رہے ہیں؟ کیا آپ اب بھی سانٹا میں یقین رکھتے ہیں؟’

سوشل میڈیا پر اس گفتگو کی جو ویڈیو گردش کر رہی ہے اس میں صدر ٹرمپ بچے سے یہ کہتے سنے جا سکتے ہیں: ‘کیونکہ سات سال کی عمر میں اس کی امید کم ہی ہوتی ہے، ٹھیک ہے ناں؟

کولمین کا جواب واضح نہیں ہے اور یہ بھی واضح نہیں کہ ٹرمپ نے یہ خاص سوال کیوں کیا کیونکہ سانٹا کا وجود تو یقیناً غیر متنازع ہے۔

اگر آپ کو کوئی شکوک ہیں تو یہ تصاویر دیکھیے جو گذشتہ چند گھنٹوں میں لی گئی ہیں اور سینٹا کلوز کے وجود کے واضح شواہد فراہم کرتی ہیں۔

باقی فون کالز بغیر کسی عجیب و غریب واقعے کے گزر گئیں، جس میں ٹرمپ اور ان کی اہلیہ نے فون کرنے والوں سے نیک خواہشات کا اظہار کیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں

آپکا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا

*