outline
Featured Video Play Icon

جہادی قیادت کے اپنے بچے شہید کیوں نہیں ہوتے؟بلال غوری کا ولاگ

قاضی حسین احمد کی پکار پر سینکڑوں نوجوانوں نے افغانستان اور کشمیر کا رُخ کیا مگر ان کے بیٹے امریکہ سے پڑھ کر آئے،سید صلاح الدین کے پانچ بیٹے ہیں اور ان میں سے ایک نے بھی جہاد کشمیر میں شرکت نہیں کی ؟حافظ سعید کے بیٹے یا داماد نے بندوق کیوں نہیں اٹھائی؟ان کے بچے ناخلف ہیں یا پھر انہیں جان بوجھ کر اس راستے سے دور رکھا جاتا ہے؟بلال غوری کا ولاگ

10 تبصرے

  1. بلال بھائی آپکے آرٹیکل پڑھ کر آپ کے لئے ایک متناسب شخصیت کا گمان ہوتا تھا لیکن آج وڈیو دیکھ کر وہ سارا مفروضہ خام ہوا آپ دل سے اتر گئے نہایت سطحی آدمی ثابت ہوئے

  2. غوری صاحب کو قاضی حسین احمد اس کے وفات کے کئی سال بعد یاد اگئے اور کیا یہ بات ہزار مرتبہ اس نے پہلے نہیں پڑھی عجیب تجزیہ بگار اگئے ہیں جو قبر میں پڑے ہوئے لوگوں پر تبصرے کرتے ہیں۔

  3. کیا کسی تحریک کے بانی یا جماعت اور تنظیم کے سربراہ کے لئے ضروری ہےکہ ان کے اہل خانہ اور دیگر عزیز اقارب بھی اس کے مشن میں اسکے شانہ بشانہ ہوں۔ ہر انسان اپنی ذات کا مکلف ہے۔ اور اپنے اخلاص کی بنیاد پر پرکھنا جائے گا۔ قائد اعظم کی بیٹی انکے ساتھ نہیں نہیں تھی تو اسکا مطلب آپ یہ لیں گے تحریک
    پاکستان کے پس منظر غلط تھا اور قائد اعظم نے لاکھوں لوگ شہید کروا کے امت مسلمہ پر ظلم کر دیا؟جناب ہم نے جماعت اسلامی کے کئی زمہ داران کے بچوں کو مجاہدین کی خدمت کرتے بھی دیکھا ہے اور انکے جنازوں میں شرکت بھی ہے۔
    آپ کسی تلوے ضرور چاٹیں لیکن جماعت یا مولانا مودودی رح کی فکر کو نشانہ بنا کر چورن نہ بیچیں۔

  4. بلال غوری نے شائد ابھی حافظ محمد سعید اور اس کے حافظ طلحہ سعید کی زندگی کا مطالعہ ہی نہیں کیا ھے۔ ورنہ وہ ذرا سوچ کر اور تول کر بولتے۔ اللہ کے بندے اس شخص کی تو ساری متاع جہاد ہی ھے۔

  5. True. aap na sachi baat ki ha bhai hamara NABI khud jang ma jata tha laken yeh dosro ko kehta ha boht Aala ha yeh bat Maa Apna Baito ko parhna ka lia jana daiti h aur yeh brainwash kar ka apna kaam laita h pahla Afghan-Russian jang ma yahi howa tha yhan sa logo ko khaa gia tha keh jang pa jao ab bi yeh yahi karta hai jo keh ghalt ha yeh brainwashing ha jazbaat ka sath khailta h .,?!’ml.:2

    1. تمھارے کتنے رشتہ داروں کی برین واش ھوئی ھے۔ اور تم کتنے مرتبہ ان لوگوں کے ساتھ معسکرات گئے ھو۔ ھم تو اللہ کا فضل ھے ان میں یہ باتیں نہیں دیکھتے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں

آپکا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا

*