تازہ ترین
outline

بھارتی اداکار تنقید کی زد میں،یہ ہمارا ملک ہےکوئی ہمیں نکال نہیں سکتا ،نصیر الدین شاہ

بالی وڈ اداکار نصیر الدین شاہ نے رواں ہفتے ایک متنازع بیان دے کر جیسے بھڑوں کے چھتے میں ہاتھ دے ڈالا۔

ویسے ان کے اس بیان کو متنازع کہنا غلط ہو گا کیونکہ انھوں نے انڈیا کے موجودہ حالات میں اپنے کچھ خدشات کا اظہار کیا ہے جوایک آزاد ہندوستانی ہونے کے ناطے ان کا بنیادی حق ہے۔

دراصل نصیر الدین شاہ حال ہی میں ریاست اتر پردیش میں پر تشدد ہجوم کے ہاتھوں ایک پولیس افسر کی ہلاکت کا ذکر کرتے ہوئے اظہار تشویش کر رہے تھے۔

ان کا کہنا تھا کہ آج انڈیا میں جو حالات ہیں جہاں ایک انسان کے مقابلے میں گائے کی موت کو زیادہ اہمیت دی جا رہی ہے۔ انھوں نے کہا کہ اب اس جن کو واپس بوتل میں بند کرنا بہت مشکل ہو گا۔

نصیر الدین شاہ کا یہ بھی کہنا تھا کہ انھیں اپنے بیٹوں عماد اور ووان کی فکر ہے کیونکہ انھوں نے اپنے بچوں کو کسی خاص مذہب کی تعلیم نہیں دی اگر کل کوئی بھیڑ انھیں گھیر لیتی ہے تو وہ کیا بتائیں گے کہ وہ کون ہیں۔ انھوں نے کہا کہ مجھے اس سب پر خوف نہیں آتا بلکہ غصہ آتا ہے۔

بہر حال نصیر الدین شاہ کے اس بیان کے فوراً بعد ہی بھکتوں کو کام مل گیا اور سوشل میڈیا پر نصیر الدین شاہ کو پاکستان کا ٹکٹ کٹوانے کے مشوروں کے ساتھ انھیں غدار کا خطاب دیا جانے لگا۔ لیکن نصیراالدین شاہ نے سوشل میڈیا پر ان ٹرولز کا منھ توڑ جواب پہلے ہی دیدیا۔ ان کا کہنا تھا کہ ‘یہ ہمارا ملک ہے اور کسی کی ہمت نہیں کہ وہ ہمیں یہاں سے نکالے۔’

اپنا تبصرہ بھیجیں

آپکا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا

*