تازہ ترین
outline

دہشتگردوں نے گوادر کے پنج تارہ ہوٹل پر دھاوا بول دیا،سکیورٹی گارڈ شہید،کلیئرنس آپریشن جاری

بلوچستان کے ساحلی شہر گوادر میں مسلح دہشتگردوں نے اکلوتے پنج تارہ ہوٹل پر دھاوا بول دیا ،سکیورٹی گارڈ نے روکنے کی کوشش کی تو اسے شہید کردیا گیا جبکہ دہشتگردوں کا تحویل میں لینے کے لیئے پاک فوج کا آپریشن کلیئرنس جاری ہے

افواج پاکستان کے محکمہ تعلقات عامہ کی جانب سے گوادر کے پرل کانٹینینٹل ہوٹل پر حملے کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا گیا ہے کہ 3 دہشت گردوں نے زبردستی پرل کانٹیننٹل ہوٹل میں داخل ہونے کی کوشش کی، ہوٹل کے مرکزی گیٹ پر گارڈ نے دہشت گردوں کو روکا تو انہوں نے گارڈ پر گولی چلا کر اُسے شہید کر دیا۔

بیان میں کہا گیا کہ فورسز نے ہوٹل کو گھیرے میں لے کر اندر موجود افراد کو بحفاظت باہر نکال لیا، دہشت گردوں کی ہوٹل کی بالائی منزل پر جانے کی کوشش ناکام بنادی گئی جبکہ کلیئرنس آپریشن جاری ہے۔

قبل ازیں ایس ایچ او گوادر اسلم بنگلزئی کا کہنا تھا کہ ‘ہمیں 4 بج کر 50 منٹ پر یہ اطلاع ملی کہ 3 سے 4 دہشت گرد پرل کانٹیننٹل ہوٹل میں داخل ہوئے، جبکہ سیکیورٹی فورسز اور حملہ آوروں کے درمیان فائرنگ کا تبادلہ جاری ہے۔’

دوسری جانب وزیر اطلاعات بلوچستان کا کہنا ہے کہ گوادر کے ہوٹل میں صرف اسٹاف موجود تھا جنہیں بحفاظت باہر نکال لیا گیا ہے۔

صوبائی وزیر نے کہا کہ تین دہشت گردوں نے ہوٹل پر حملہ کیا جس پر سیکیورٹی فورسز نے بروقت کارروائی کی۔

خیال رہے کہ یہ فائیو اسٹار ہوٹل گوادر کے فش ہاربر روڈ پر کوہِ باطل میں واقع ہے۔ گوادر کا خطہ اربوں ڈالر کے چائنا پاکستان اقتصادی راہداری منصوبوں کی وجہ سے انتہائی اہمیت کا حامل ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں

آپکا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا

*