outline

جعلی ٹرسٹ ڈیڈکا الزام،مریم نوازاحتساب عدالت طلب،کیا مجھے پیش ہونا چاہئے؟عوام سے مشورہ طلب

احتساب عدالت نے نوازشریف کی صاحبزادی مریم نواز کو اس ٹرسٹ ڈیڈ سے متعلق طلب کرلیا گیا ہے جو تین سال پہلے عدالت میں پیش کی گئی تھی اور اس ٹرسٹ ڈیڈٰ کو جعلی کہا گیا تھا

نیب کی درخواست پر راولپنڈی کی احتساب عدالت کے جج نے مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کو 19 جولائی کو عدالت میں پیش ہونے کا حکم دیدیا ہے

اس سے قبل احتساب عدالت کے جج محمد بشیر کے روبرو دلائل دیتے ہوئے نیب پراسیکیوٹر نے کہا کہ ’مریم نواز نے ایون فیلڈ ریفرنس میں جعلی ٹرسٹ ڈیڈ پیش کر کے عدالت کو گمراہ کیا تھا لہٰذا عدالت اپنے اختیارات کو استعمال کرتے ہوئے مریم نواز کو اس جرم میں بھی سزا سنائے۔‘

یاد رہے کہ گزشتہ برس اسلام آباد ہائیکورٹ نے ایون فیلڈ ریفرنس میں احتساب عدالت کی جانب سے سابق وزیراعظم نواز شریف، ان کی صاحبزادی مریم نواز اور داماد کیپٹن (ر) صفدر کو سنائی گئی سزا معطل کرتے ہوئے تینوں کی رہائی کا حکم دیا جس کے بعد انہیں اڈیالہ جیل سے رہا کردیا گیا۔

احتساب عدالت کی طرف سے نوٹس جاری کیے جانے کے بعد مریم نواز نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں کہا ہے ’پریس کانفرنس میں تمام سازشیں بے نقاب ہونے کے بعد گھبراہٹ میں حکومت نے میرے خلاف ایک اور مقدمہ قائم کردیا ہے۔

’میں عوام سے پوچھتی ہوں کہ میرے سوالات کے جواب ملنے کی بجائے کیا مجھے اس نیب میں پیش ہونا چاہیے جو آڈیو/ویڈیو کے ذریعے یرغمال ہو؟‘

ان کا اس حوالے سے مزید کہنا تھا کہ ’بلانا ہے تو اپنے رسک پر بلانا! میری باتیں نا سن سکو گے نہ سہہ سکو گے! یہ نہ ہو کہ پھر سر پیٹتے رہ جاؤ!۔‘

اپنا تبصرہ بھیجیں

آپکا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا

*