تازہ ترین
outline

شیخ رشید اسپیکر قومی اسمبلی پر چڑھ دوڑے،اختیارات کے غلط استعمال کا الزام

وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد قومی اسمبلی کے اسپیکر اسد قیصر پر سخت برہم ہیں اور انہوں نے پبلک اکائونٹس کمیٹی کا رُکن نہ بنانے پر اسپیکر کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا ہے

وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے شیخ رشید احمد نے کہا کہ اسپیکر قومی اسمبلی کو کوئی آئینی اختیار نہیں ہے کہ وہ اُنھیں پبلک اکائونٹس کمیٹی کا رُکن بننے سے روکیں

وفاقی وزیر ریلوے نے کہا کہ وزیراعظم کی طرف سے میں پبلک اکاونٹس کمیٹی کا رکن ہوں، اسپیکر کا کوئی اختیار نہیں کہ مجھے پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کا رکن نہ بنائے، اسپیکر نے مجھے پی اے سی کی رکنیت نہ دے کر غلط کیا

شیخ رشید احمد نے شہباز شریف کو پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کی چیئرمین شپ سے ہٹانے کے لیے 8 دن کی ڈیڈ لائن دیتے ہوئے کہا ہے کہ شہباز شریف پی اے سی میں کسی قیمت پر قبول نہیں، چاہے دنیا ادھرکی ادھر ہو جائے۔

واضح رہے کہ وزیراعظم کی جانب سے ریاض فتیانہ کی جگہ شیخ رشید کو پبلک اکائونٹس کمیٹی کا رُکن بنانے کی اطلاعات موصول ہوئی تھیں مگر اسپیکر نے رد و بدل سے انکار کر دیا

شیخ رشید کا نامزد کیئے جانے کے بعد مسلم لیگ (ن) کی جانب سے بھی رانا ثنااللہ اور خواجہ سعد رفیق کو پبلک اکائونٹس کمیٹی کا رُکن بنانے کی درخواست دی گئی تھی

قومی اسمبلی سیکریٹریٹ کے مطابق ابھی تک شیخ رشید احمد کی طرف سے پی اے سی کا رکن بننے سے متعلق کوئی درخواست موصول نہیں ہوئی تاہم رانا ثنا اللہ اور خواجہ سعد رفیق کی درخواستیں موصول ہو چکی ہیں

اپنا تبصرہ بھیجیں

آپکا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا

*