تازہ ترین
outline

بے نامی اثاثوں کیخلاف کارروائی کا آغاز،راولپنڈی میں 6ہزار کنال بے نامی جائیداد منجمد

حکومت کی طرف سے ایمنسٹی اسکیم کےتحت اثاثے ظاہر کرنے کے لیئے دی گئی مہلت ختم ہونے کے بعد بے نامی جائیداد اور اثاثہ جات کے خلاف کارروائی کا آغاز کردیا گیا ہے اور راولپنڈی میں 6ہزار کنال بے نامی جائیداد منجمد کرلی گئی ہے

ایف بی آر ذرائع کے مطابق منجمد کی گئی زرعی اراضی مسلم لیگ ن کے رہنما چوہدری تنویر حسین کی ہے اور اسے منجمد کرنے کے احکامات ڈپٹی کمشنر انکم ٹیکس راولپنڈی نے جاری کئے ہیں

ٍفیڈرل بورڈ آف ریونیو حکام نے جو جائیداد منمجد کی ہے وہ راولپنڈی کے موضع راجڑ میں واقع ہے اور مبینہ طور پر چوہدری تنویر حسین نے اپنے ملازمین کے نام پر خرید رکھی تھی

ایف بی آر کے مطابق یہ جائیداد چوہدری تنویر کے ملازمین محمد بشارت، راجا عبدالشکور،شاہجہاں بیگم، محمد معروف،اظہر علی اور عبدالعزیز کے نام پر تھی۔

ذرائع کے مطابق جن 6افراد کے نام پر بے نامی جائیداد تھی انہیں نوٹس جاری کر دیے گئے ہیں،کارروائی مکمل ہونے کے بعد حکومت یہ جائیداد ضبط کرسکتی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں

آپکا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا

*