تازہ ترین
outline

بھارتی پائلٹ ابھینندن کیساتھ چل رہی خاتون کون ہیں؟

بھارتی پائلٹ ونگ کمانڈر ابھینندن کو جمعہ کے روز واہگہ بارڈر پر بھارت کے حوالے کر دیا گیا مگر ان سے جڑی باتوں کی گونج اب بھی میڈیا پر سنائی دے رہی ہے اور یہ سوال سرحد کے دونوں طرف اٹھایا جا رہا ہے کہ بھارتی پائلٹ کیساتھ چل رہی وہ خاتون کون تھیں جو واہگہ بارڈر پر زیرو پوائنٹ تک آئیں ؟

جب ونگ کمانڈر ابھینندن کو واہگہ بارڈر پر بھارتی حکام کے حوالے کیا جا رہا تھا تو ان کے ایک طرف باوردی بھارتی افسر چل رہے تھے جو اسلام آباد کے بھارتی سفارتخانے میں ایئر اتاشی ہیں جبکہ ان کے ساتھ ایک خاتون موجود تھیں

بہت سے لوگوں کو یہ غلط فہمی ہوئی کہ شاید اس خاتون کا تعلق بھارت سے ہے اور وہ ابھینندن کو لینے آئی ہیں مگر یہ خاتون پاکستان کی ایک ہونہار سول سرونٹ ہیں

بھارتی ونگ کمانڈر ابھینندن کیساتھ چل رہی اس خاتون کا نام ڈاکٹر فریحہ بگٹی ہے ،ان کا تعلق بلوچستان کے بگٹی قبیلے سے ہے اور یہ کیرئر ڈپلومیٹ ہیں

ڈاکٹر فریحہ بگٹی ان دنوں اسلام آباد وزارت خارجہ میں انڈین ڈیسک کی انچارج ہیں اور یہی وجہ ہے کہ وہ اپنی پیشہ ورانہ ذمہ داریوں کے تحت بھارتی پائلٹ ابھینندن کو واہگہ بارڈر پر بھارتی حکام کے سپرد کرنے پہنچیں-

بھارتی جاسوس کلبھوشن کا کیس بھی ڈاکٹر فریحہ بگٹی کے پاس ہے اور جب کلبھوشن کی فیملی ان سے ملنے کے لیئے اسلام آباد آئی تو ڈاکٹر فریحہ بگٹی وہاں پر بھی موجود تھیں

اس وقت پاکستان کی فارن سروس میں 63 خاتون افسر موجود ہیں جن میں سے ڈاکٹر فریحہ بگٹی بلوچستان سے تعلق رکھنے والی اکلوتی خاتون افسر ہیں

اپنا تبصرہ بھیجیں

آپکا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا

*